کراچی ()پاک سرزمین پارٹی کے صدر انیس قائم خانی نے کہا ہے کہ جو لوگ مصطفی کمال اور انیس قائم خانی کو جانتے ہیں وہ یہ جانتے ہیں کہ ہم اپنے عوام کو مایوس نہیں کریں گے،کراچی کے لوگوں سید مصطفی کمال کے ہاتھ مضبوط کرو اور اس کا ساتھ دو ان خیالات اظہار انہوں نے کراچی پر یس کلب کے باہر لگائے گئے ا حتجاجی کیمپ کے سامنے جمع ہونے والے کارکنوں سے خطاب کر تے ہوئے کیا۔سینئروائس چیئرمین ڈاکٹر صغیر احمد کہاکہ پاک سرزمین پارٹی کے قائدین نے اس ملک کی تاریخ کا منفرد احتجاج کر دکھایا ہے اور اس احتجاجی تحریک کو پورے پاکستان میں بڑھایا جائے گا، حکومتی نمائندوں نے لولی پوپ دینے کی کوشش کی لیکن انہیں معلوم نہیں تھا کہ ہم ایم کیو ایم نہیں ہیں آج حکمرانوں کو پاک سرزمین پارٹی کی وجہ سے صفائی مہم اور سڑکوں کی مرمت یاد آتی ہے اوروفاق سے اختیارات مانگے جا رہے ہیں لیکن جو اختیارات ہیں انہیں نچلی سطح پر منتقل نہیں کیا۔انہوں نے کہاکہ چیئرمین پاک سرزمین پارٹی سید مصطفی کمال اور صدر انیس قائم خانی نے اس شہر کے مسائل کیلئے خود احتجاج کیاانہوں نے کہاکہ عوامی کے بنیادی حقوق حذف کرنے والوں کیخلاف پاک سرزمین پارٹی کے قائدین نے مشکل راستہ اختیار کیا اپنے آرام اور سکون کو خیر باد کہہ کر تپتی دھوپ اور رات کو سکون اپنے لوگوں کیلئے فٹ پاتھ پر گزاریں اورعوام کو دھرنے میں شرکت کیلئے اب تک نہیں بلوایا گیا تھا انہون نے کہاکہ کراچی سمیت اندرون سندھ، پنجاب، بلوچستان اور خیبر پختون خواہ سے عوام نے احتجاجی میں آکر اظہار یکجہتی کیا۔ سینئر وائس چیرمین انیس ایڈووکیٹ نے کہاکہ اس شہر میں حکمرانوں کو عوام کے مسائل کے حل کیلئے وائرس میں مبتلا کردیا ہے پیپلزپارٹی اور ایم کیو ایم آج عوام کے مسائل کے حل کیلئے ریلی نکال رہے ہیں انہوں نے کہاکہ کرپٹ مافیا کو عوام کے حقوق کی بات کرنے کا حق نہیں ہے فاروق ستار چھوٹا چیتن کی سیاست دم توڑ رہی ہے اورنواز شریف کی پنجاب اور زرداری کی سیاست سندھ میں دم توڑ رہی ہے یہ کیسی جمہوریت ہے جہاں انسان کو زندگی گزارنے کی سہولیات مہیا نہ کی جائیں انہوں نے کہاکہ پورے ملک میں لوٹ مار ہے، اس ملک کو کھوکھلا کیا جا رہا ہے فوری طور پر درندوں اور رشوت خوروں کو لگام نہیں دی گئی تو یہ ملک کو کھا جائیں گے انہون نے کہاکہ پاکستان کی سیاست میں پہلی بار ہوا کہ زاتی مفادات کیلئے نہیں عوامی حقوق کیلئے احتجاج کیا گیا اور میں پاک سرزمین پارٹی کے چیئرمین و صدر نے جس جرات اور بہادری کا مظاہرہ کیا اس پر خراج تحسین پیش کرتا ہوں وائس چیئرمین افتخار رندھاوا نے کہاکہ18 دن سے کراچی کے مسائل کیلئے کراچی کے بیٹے مصطفی کمال اور انیس قائم خانی کا ساتھ دینا ہوگا انہون نے کہاکہ آسمان سے فرشتے نہیں اتریں گے، اپنے حقوق کیلئے خودجدوجہد کرنا ہوگی ہم اشرف المخلوقات ہیں خود سے نکلنا ہوگا کوشش کرنا ہوگی،وائس چیرمین اشفاق منگی نے کہاکہ سید مصطفی کمال اور انیس قائم خانی نے کراچی کے حقوق کیلئے آواز لگائی اورعوام کیلے بجلی، پانی، گیس اور روزگار کیلئے مصطفی کمال اور انیس قائم خانی نے خود احتجاج کیاانہون نے کہاکہ کراچی کے عوام کی خدمت ایک نوجوان مصطفی کمال نے کی تھی جب مصطفی کمال نے عوام کے ساتھ ہونے والی زیادتی کو دیکھا تو اپنے عوام کیلے واپس آئے انہون نے کہاکہ ایم کیو ایم اور آصف زرداری کا باپ بیٹے کا تعلق ہے کراچی کو بیچنے میں ایم کیو ایم اور اندرون سندھ کو پیپلز پارٹی نے بیچا اور وزیر اعلی اور گورنر عوام کے ملازم ہیں. یہ ان کے باپ کی جاگیر نہیں ہے جو مرضی چاہے کریں،صدر کراچی ڈویژن آصف حسنین نے کہاکہ ارباب اقتدار نے سمجھا تھا کہ سندھ اور کراچی کے لوگ اپنے حقوق کیلئے بولنا بھول چکے ہیں ظلم و زیادتیوں کا باب اب ختم ہونے چلا ہے،انہوں نے کہاکہ فاروق ستار صاحب کو اب کہیں جگہ نہیں ملے گی، کراچی کے دلوں سے آواز آرہی ہے کہ قدم بڑھاؤ مصطفی ہم تمہارے ساتھ ہیں انہوں نے کہاکہ بھٹو صاحب کو کراچی کے عوام نے مسترد کیا تو ان کی حکومت بھی نہیں رہی اگر کراچی کے عوام ڈٹے رہے تو اسلام آباد کے ایوانوں میں لرزہ تاری ہوجائے گا انہوں نے کراچی کے عوام کو شاباش ہے جنہوں نے مصطفی کمال اور انیس قائم خانی کی آواز ہر لبیک کہا کراچی کے عوام کا فیصلہ ہے کہ وہ سچائی کے ساتھ رہیں گے